1. ختم نبوت فورم پر مہمان کو خوش آمدید ۔ فورم میں پوسٹنگ کے طریقہ کے لیے فورم کے استعمال کا طریقہ ملاحظہ فرمائیں ۔ پھر بھی اگر آپ کو فورم کے استعمال کا طریقہ نہ آئیے تو آپ فورم منتظم اعلیٰ سے رابطہ کریں اور اگر آپ کے پاس سکائیپ کی سہولت میسر ہے تو سکائیپ کال کریں ہماری سکائیپ آئی ڈی یہ ہے urduinملاحظہ فرمائیں ۔ فیس بک پر ہمارے گروپ کو ضرور جوائن کریں قادیانی مناظرہ گروپ
  2. [IMG]
  3. ختم نبوت فورم کا اولین مقصد امہ مسلم میں قادیانیت کے بارے بیداری شعور کرنا ہے ۔ اسی مقصد کے حصول کے لیے فورم پر علمی و تحقیقی پراجیکٹس پر کام جاری ہے جس میں ہمیں آپ کے علمی تعاون کی اشد ضرورت ہے ۔ آئیے آپ بھی علمی خدمت میں اپنا حصہ ڈالیں ۔ قادیانی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد قادیانی کتب پراجیکٹ مرزا غلام قادیانی کی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ تمام پراجیکٹس پر کام کرنے کی ٹرینگ یہاں سے لیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ کا طریق کار

حرف چند

عبیداللہ لطیف نے 'کتب کا تعارف و تبصرہ' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ جولائی 24, 2017

  1. ‏ جولائی 24, 2017 #1
    عبیداللہ لطیف

    عبیداللہ لطیف رکن ختم نبوت فورم

    تحریر :_ اوریا مقبول جان

    فتنہ قادیانیت یوں تو برصغیر کے مسلمانوں تک تقریبًا پچاس سال تک اپنے مربی اور مددگار انگریز حکومت کی مدد اور اشیر باد سے پھیلتا پھولتا رہا لیکن گذشتہ تیس سالوں سے ان حضرات نے اسلام کا لبادہ اوڑھ کر پوری دنیا کے سامنے خود کو مسلمان ظاہر کرتے ہوئے اپنے آپ کو منظم کیا ان کے مغربی معاشرے میں قابل قبول ہونےطکی بنیادی وجہ یہ تھی کہ انہوں نے مغربی معاشرے کے طاغوت کے مقابل میں کھڑا ہونے کی بجائے اسے ایک رحمت اور مددگار کے طور پر قبول کر لیا . مرزا غلام احمد چونکہ اپنی دعوت کے آغاز سے ہی تصور جہاد کے خلاف تھے اس لیے اسے انگریز کی بلا شرکت غیرے سر پرستی میسر آگئی .9/11 کے بعد مغرب کو بھی ایسے ہی اسلام کی ضرورت تھی جو ان کی اقدار ,روایت ,کلچر اور بالادستی کے سامنے سر نگوں کر دے . یہ کام انہوں نے بخوبی انجام دیا یہی وجہ ہے کہ آج مغرب ان کو "حقیقی اسلام" کہتا ہے اور ان کے ظلم و تشدد کے خلاف اٹھنے والی آوازوں کو دہشت گرد کہہ کر دبا دیا جاتا ہے _
    1974ء میں قادیانیوں کو اقلیت قرار دینے کے بعد پاکستان میں بھی ایک طبقہ انہیں مظلوم ثابت کرتا رہا دوسری جانب دینی طبقے نے بھی ان کے رد میں کئے جانے والے علمی کام کو روک لیا کہ اب مقصد پورا ہو گیا لیکن یہ سب خفیہ طور پر منظم ہوتے رہے اور مظلومیت کے پردے میں اسلام کی جڑیں کاٹتے رہے .جناب عبیداللہ لطیف کی دونوں کتابیں "مقام صحابہ اور فتنہ قادیانیت" اور "مرزاقادیانی کے دعوی باطلہ ظل اور بروز کی حقیقت" بڑے عرصے بعد رد قادیانیت کے سلسلے میں بہت بڑا کام ,زبان خوبصورت ' طرزبیاں دلنشیں اورموادتو علم کا ذخیرہ ہے عبیداللہ لطیف کا یہ کام اس جدید دور میں فتنہ قادیانیت کے بارے میں غلط معلومات کے خاتمے کا باعث بنے گا اور امت مسلمہ کو ان کی خطرناک چالوں سے آگاہ کرے گا.
    اوریا مقبول جان لاہور

اس صفحے کی تشہیر