1. ختم نبوت فورم پر مہمان کو خوش آمدید ۔ فورم میں پوسٹنگ کے طریقہ کے لیے فورم کے استعمال کا طریقہ ملاحظہ فرمائیں ۔ پھر بھی اگر آپ کو فورم کے استعمال کا طریقہ نہ آئیے تو آپ فورم منتظم اعلیٰ سے رابطہ کریں اور اگر آپ کے پاس سکائیپ کی سہولت میسر ہے تو سکائیپ کال کریں ہماری سکائیپ آئی ڈی یہ ہے urduinملاحظہ فرمائیں ۔ فیس بک پر ہمارے گروپ کو ضرور جوائن کریں قادیانی مناظرہ گروپ
  2. [IMG]
  3. ختم نبوت فورم کا اولین مقصد امہ مسلم میں قادیانیت کے بارے بیداری شعور کرنا ہے ۔ اسی مقصد کے حصول کے لیے فورم پر علمی و تحقیقی پراجیکٹس پر کام جاری ہے جس میں ہمیں آپ کے علمی تعاون کی اشد ضرورت ہے ۔ آئیے آپ بھی علمی خدمت میں اپنا حصہ ڈالیں ۔ قادیانی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد قادیانی کتب پراجیکٹ مرزا غلام قادیانی کی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ تمام پراجیکٹس پر کام کرنے کی ٹرینگ یہاں سے لیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ کا طریق کار

عقیدہ حیات عیسیؑ اور مجددین امت (امام عبدالرحمن ابن جوزیؒ کا عقیدہ)

محمدابوبکرصدیق نے 'تحریک ختم نبوت میں علماء و مشائخ کا کردار' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ جون 30, 2015

  1. ‏ جون 30, 2015 #1
    محمدابوبکرصدیق

    محمدابوبکرصدیق ناظم پراجیکٹ ممبر

    عقیدہ حیات عیسیؑ اور مجددین امت (امام عبدالرحمن ابن جوزیؒ کا عقیدہ)

    عظمت شان
    قادیانیوں کے نزدیک امام ابن جوزی بھی چھٹی صدی ہجری میں اصلاح عقائد وتجدید دین کے لئے مبعوث ہوئے تھے۔

    (عسل مصفی ج۱ ص۱۶۴)
    امام ابن جوزی نے قادیانیوں کے عقیدہ کا ستیاناس کردیا ہے۔ آپ نے ایک حدیث نبوی بیان کی ہے جو درج ذیل ہے۔
    ’’عن عبداﷲ بن عمرؓ قال قال رسول اﷲﷺ ینزل عیسیٰ ابن مریم الیٰ الارض فیتزوج ویولد لہ ویملک خمساً واربعین سنۃ ثم یموت فیدفن معی فی قبری فاقوم انا وعیسیٰ ابن مریم فی قبر واحد بین ابوبکرؓ وعمرؓ‘‘

    (رواہ ابن جوزی فی کتاب الوفاء مشکوٰۃ ص۴۸۰، باب نزول عیسیٰ علیہ السلام)
    عظمت حدیث:

    ۱…مرزاغلام احمد قادیانی نے اپنی مندرجہ ذیل کتب میں اس حدیث کو صحیح تسلیم کیا ہے۔

    (ضمیمہ آتھم ص۵۳، خزائن ج۱۱ ص۳۳۷، کشتی نوح ص۱۵، خزائن ج۱۹ ص۱۶، نزول المسیح ص۴۷، خزائن ج۱۸ ص۴۲۵، حقیقت الوحی ص۳۰۷، خزائن ج۲۲ ص۳۲۰، ضمیمہ حقیقت الوحی حاشیہ ص۵۱، خزائن ج۲۲ ص۶۷۴، نزول المسیح ص۳، خزائن ج۱۸ ص۳۸۱)
    ۲… مرزامحمود خلیفہ قادیانی نے بھی اس کی صحت کو تسلیم کر لیا ہے۔
    (انوار خلافت ص۵۰)
    ۳… مرزاخدابخش مرزائی نے قادیانیوں کی شہرہ آفاق کتاب عسل مصفی میں نہ صرف اس کی صحت کو ہی تسلیم کیا ہے۔ بلکہ اس حدیث کو مرزاقادیانی پر چسپاں کرنے کی سعی کی ہے۔ یعنی محمدی بیگم کے نکاح پر لگایا ہے۔ لیکن خدا نے انہیں اس میں بھی ناکام رکھا۔ محمدی بیگم نکاح میں نہ آئی۔ ہم اس حدیث کا ترجمہ قادیانی کے اپنے الفاظ میں بیان کرتے ہیں۔
    ترجمہ حدیث ’’یعنی ابن جوزی نے عبداﷲ بن عمرؓ سے روایت کی ہے کہ رسول اﷲﷺ نے فرمایا کہ عیسیٰ ابن مریم ایک خاص زمین میں نازل ہوں گے۔ پھر وہ نکاح بھی کریں گے اور ان کے لڑکے بالے بھی ہوں گے اور ۴۵برس تک ٹھہریں گے۔ (یملک کا یہ ترجمہ قادیانی ایجاد ہے۔ یملک کے معنی ہیں بادشاہی کریں گے) پھر فوت ہوں گے اور پھر میری قبر میں دفن ہوں گے۔ پھر میں اور عیسیٰ ابن مریم ایک ہی قبر سے ؓ اور عمرؓ کے درمیان ہے کھڑے ہوں گے۔‘‘

    (عسل مصفی ج۲ ص۴۴۰،۴۴۱)
    میں نے چھٹی صدی ہجری کے مجدد وامام کی روایت سے قادیانیوں کے اپنے الفاظ میں حدیث نبوی پیش کر دی ہے۔ اگر نجات مطلوب ہو تو ضرور تسلیم کر لیں گے۔
    نوٹ: تفصیل اس حدیث کی گزر چکی ملاحظ فرمائیں۔

اس صفحے کی تشہیر