1. ختم نبوت فورم پر مہمان کو خوش آمدید ۔ فورم میں پوسٹنگ کے طریقہ کے لیے فورم کے استعمال کا طریقہ ملاحظہ فرمائیں ۔ پھر بھی اگر آپ کو فورم کے استعمال کا طریقہ نہ آئیے تو آپ فورم منتظم اعلیٰ سے رابطہ کریں اور اگر آپ کے پاس سکائیپ کی سہولت میسر ہے تو سکائیپ کال کریں ہماری سکائیپ آئی ڈی یہ ہے urduinملاحظہ فرمائیں ۔ فیس بک پر ہمارے گروپ کو ضرور جوائن کریں قادیانی مناظرہ گروپ
  2. ختم نبوت لائبریری پراجیکٹ

    تحفظ ناموس رسالتﷺ و ختم نبوت پر دنیا کی مایہ ناز کتب پرٹائپنگ ، سکینگ ، پیسٹنگ کا کام جاری ہے۔آپ بھی اس علمی کام میں حصہ لیں

    ختم نبوت لائبریری پراجیکٹ
  3. ہمارا وٹس ایپ نمبر whatsapp no +923247448814
  4. [IMG]
  5. ختم نبوت فورم کا اولین مقصد امہ مسلم میں قادیانیت کے بارے بیداری شعور کرنا ہے ۔ اسی مقصد کے حصول کے لیے فورم پر علمی و تحقیقی پراجیکٹس پر کام جاری ہے جس میں ہمیں آپ کے علمی تعاون کی اشد ضرورت ہے ۔ آئیے آپ بھی علمی خدمت میں اپنا حصہ ڈالیں ۔ قادیانی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد قادیانی کتب پراجیکٹ مرزا غلام قادیانی کی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ تمام پراجیکٹس پر کام کرنے کی ٹرینگ یہاں سے لیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ کا طریق کار

عقیدہ حیات عیسیؑ اور مجددین امت (حافظ ابونعیمؒ کا عقیدہ)

محمدابوبکرصدیق نے 'توضیح الکلام فی اثبات حیات عیسی علیہ السلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ جون 28, 2015

  1. ‏ جون 28, 2015 #1
    محمدابوبکرصدیق

    محمدابوبکرصدیق ناظم پراجیکٹ ممبر

    عقیدہ حیات عیسیؑ اور مجددین امت (حافظ ابونعیمؒ کا عقیدہ)

    عظمت شان
    حافظ ابو نعیم صاحبؒ چوتھی صدی کے مجدد وامام الزمان تھے۔

    (عسل مصفی ج۱ ص۱۶۳)
    مجدد وامام الزمان کی شان آپ قادیانی کے الفاظ میں پڑھ چکے ہیں۔
    اب ہم حافظ ابونعیمؒ کی تحریر سے حیات عیسیٰ علیہ السلام کا ثبوت پیش کرتے ہیں۔
    ۱… ’’قال رسول اﷲﷺ ینزل عیسیٰ ابن مریم فیقول امیرہم المہدی تعال صلی بنا فیقول الاوان بعضکم علی بعض امراء تکرمۃ اﷲ لہذہ الامۃ‘‘
    (ابونعیم الحاوی للفتاویٰ ج۲ ص۶۴، الفتاوی الحادیثیہ ص۳۲، باب فی ظہور المہدی)
    ’’فرمایا رسول اﷲﷺ نے حضرت عیسیٰ علیہ السلام ابن مریم اتریں گے۔ پس مسلمانوں کے امیر یعنی امام مہدی کہیں گے آئیے نماز پڑھائیے پس حضرت عیسیٰ کہیں گے نہ۔ تحقیق تم میں سے بعض بعض پر امیر ہیں اور یہ اس امت کی بزرگی ہے۔‘‘
    ۲… ’’قال رسول اﷲﷺ ولن تہلک امۃ انافی اولہا وعیسیٰ فی آخرہا والمہدی فی اوسطہا‘‘

    (کنزالعمال ج۱۴ ص۴۶۶، حدیث نمبر۳۸۶۷۱، رواہ ابونعیم فی اخبار المہدی ، بحوالہ عسل مصفی ج۲ ص۹۴)
    ’’اور فرمایا رسول اﷲﷺ نے وہ امت ہرگز ہلاکت نہیں ہوگی۔ جس کے شروع میں میں ہوں اور اس کے آخر میں عیسیٰ ابن مریم ہے اور ہم دونوں کے درمیان امام مہدی ہے۔‘‘
    ۳… حضرت ابن عباسؓ فرماتے ہیں کہ:
    ’’حضرت عیسیٰ علیہ السلام نازل ہوکر شادی کریں گے اور صاحب اولاد ہوں گے۔ آپ کی شادی قوم شعیب میں ہوگی جو حضرت موسیٰ علیہ السلام کے سسرال ہیں۔ ان کو بنی جزام کہتے ہیں۔‘‘

    (رواہ ابونعیم فی کتاب الفتن)
    ناظرین غور کیجئے! کہ چوتھی صدی کے مجدد وامام کیسے صاف صاف الفاظ میں حیات عیسیٰ علیہ السلام کا ثبوت دے رہے ہیں۔

اس صفحے کی تشہیر