1. ختم نبوت فورم پر مہمان کو خوش آمدید ۔ فورم میں پوسٹنگ کے طریقہ کے لیے فورم کے استعمال کا طریقہ ملاحظہ فرمائیں ۔ پھر بھی اگر آپ کو فورم کے استعمال کا طریقہ نہ آئیے تو آپ فورم منتظم اعلیٰ سے رابطہ کریں اور اگر آپ کے پاس سکائیپ کی سہولت میسر ہے تو سکائیپ کال کریں ہماری سکائیپ آئی ڈی یہ ہے urduinملاحظہ فرمائیں ۔ فیس بک پر ہمارے گروپ کو ضرور جوائن کریں قادیانی مناظرہ گروپ
  2. [IMG]
  3. ختم نبوت فورم کا اولین مقصد امہ مسلم میں قادیانیت کے بارے بیداری شعور کرنا ہے ۔ اسی مقصد کے حصول کے لیے فورم پر علمی و تحقیقی پراجیکٹس پر کام جاری ہے جس میں ہمیں آپ کے علمی تعاون کی اشد ضرورت ہے ۔ آئیے آپ بھی علمی خدمت میں اپنا حصہ ڈالیں ۔ قادیانی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد قادیانی کتب پراجیکٹ مرزا غلام قادیانی کی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ تمام پراجیکٹس پر کام کرنے کی ٹرینگ یہاں سے لیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ کا طریق کار

قادیانیوں کا منہ بند

محمدابوبکرصدیق نے 'عقیدہ ختم نبوت' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ ستمبر 28, 2014

  1. ‏ ستمبر 28, 2014 #1
    محمدابوبکرصدیق

    محمدابوبکرصدیق ناظم پراجیکٹ ممبر

    قادیانیوں کا منہ بند
    قادیانیوں کا منہ بند کرنے کے لئے یہ حوالہ زیر نظر رہے کہ :
    (۱)… مرزا قایانی نے اپنی کتاب ازالہ اوہام حصہ دوم ص ۵۳۸ ‘خزائن ص ۳۸۹ ج ۳ پر لکھا ہے :’’ اقوال سلف وخلف درحقیقت کوئی مستقل حجت نہیں۔‘‘
    (۲)… مرزا محمود نے اپنی کتاب حقیقت النبوۃ ص ۱۲۲ تا ۱۲۳ پر لکھا ہے :’’ نبی کی وہ تعریف جس کی رو سے آپ (مرزا قادیانی) اپنی نبوت کا انکار کرتے رہے ہیں یہ ہے کہ نبی وہی ہوسکتا ہے جو کوئی نئی شریعت لائے یا پچھلی شریعت کے بعض احکام کو منسوخ کرے یا یہ کہ اس نے بلاواسطہ نبوت پائی اور کسی دوسرے نبی کا متبع نہ ہو اور یہ تعریف عام طور پر مسلمانوں میں مسلم تھی۔‘‘
    لیجئے ! مرزا محمود نے خود تسلیم کرلیا کہ اہل اسلام کے نزدیک صرف ایک ہی نبوت تھی یعنی تشریعی ۔( غیرتشریعی ان کے ہاں صرف ولایت تھی مگر اس پر نبوت کے نام کا ان کے نزدیک بھی اطلاق درست نہ تھا۔)
    اس باب میں مزید تفصیلات کے لئے مناظر اسلام حضرت مولانا لال حسین اختر ؒ کا رسالہ’’ ختم نبوت اور بزرگان امت ‘‘ مشمولہ احتساب قادیانیت جلد اول ص ۱۱۵تا۱۴۱‘ بقیہ السلف حضرت مولانا محمد نافع مدظلہ کا رسالہ مسئلہ ختم نبوت اور سلف صالحین اور مناظر اسلام مولاناعلامہ خالد محمود کی کتاب عقیدہ الامت فی معنی ختم نبوت سے استفادہ کیا جاسکتا ہے۔
    • Like Like x 3
  2. ‏ فروری 24, 2016 #2
    شفیق احمد

    شفیق احمد رکن ختم نبوت فورم

    مرزا قادیانی کا یہ بیان کہ ’’ اقوال سلف وخلف درحقیقت کوئی مستقل حجت نہیں‘‘ اس دور کا ہے جب مرزا قادیانی نے قرآن کی 30 آیات سے وفات حضرت عیسی علیہ السلام ثابت کرنے کی کوشش کی ۔ چونکہ تیرہ سو سال سے تمام کبار مسلمان ہستیاں اس عقیدہ پر قائم رہی کہ حضرت عیسی علیہ السلام زندہ ہیں تو اس اجتماعی عقیدے کو سبوثار کرنے کیلئے مرزا قادیانی نے مذکورہ بالا نظریہ کو بزرگان دین کے اجتماعی عقیدے کو تصادم قرآن کے تناظر میں لکھا۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔اب اگر کوئی قادیانی کسی مسلمان سے عقیدہ ختم نبوت پر ڈسکشن کے دوران کسی بزرگ خاص طور پر شیخ ابن عربی کا توڑ موڑ کر کوئی حوالہ دینے کی کوشش کرے تو اس سے گفتگو کو طول دینے کی بجائے مرزا قادیانی کا یہ حوالہ پیش کر دینا ہی کافی ہے۔
    • Like Like x 2

اس صفحے کی تشہیر