1. ختم نبوت فورم پر مہمان کو خوش آمدید ۔ فورم میں پوسٹنگ کے طریقہ کے لیے فورم کے استعمال کا طریقہ ملاحظہ فرمائیں ۔ پھر بھی اگر آپ کو فورم کے استعمال کا طریقہ نہ آئیے تو آپ فورم منتظم اعلیٰ سے رابطہ کریں اور اگر آپ کے پاس سکائیپ کی سہولت میسر ہے تو سکائیپ کال کریں ہماری سکائیپ آئی ڈی یہ ہے urduinملاحظہ فرمائیں ۔ فیس بک پر ہمارے گروپ کو ضرور جوائن کریں قادیانی مناظرہ گروپ
  2. [IMG]
  3. ختم نبوت فورم کا اولین مقصد امہ مسلم میں قادیانیت کے بارے بیداری شعور کرنا ہے ۔ اسی مقصد کے حصول کے لیے فورم پر علمی و تحقیقی پراجیکٹس پر کام جاری ہے جس میں ہمیں آپ کے علمی تعاون کی اشد ضرورت ہے ۔ آئیے آپ بھی علمی خدمت میں اپنا حصہ ڈالیں ۔ قادیانی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد قادیانی کتب پراجیکٹ مرزا غلام قادیانی کی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ تمام پراجیکٹس پر کام کرنے کی ٹرینگ یہاں سے لیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ کا طریق کار

قادیانی الہامی حمل

عبیداللہ لطیف نے 'قادیانی فقہ' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ جون 26, 2017

  1. ‏ جون 26, 2017 #1
    عبیداللہ لطیف

    عبیداللہ لطیف رکن ختم نبوت فورم

    رکنیت :
    ‏ مئی 19, 2016
    مراسلے :
    86
    موصول پسندیدگیاں :
    11
    نمبرات :
    8
    جنس :
    مذکر
    پیشہ :
    لیبر
    مقام سکونت :
    محلہ جمیل آباد شیخوپورہ روڈ فیصل آباد
    قادیانی الہامی حمل:۔
    محترم قارئین ! اگر مرزا قادیانی اوراس کی ذریت کی تحریروں کو ملاحظہ کریں تو انسان اس شش و پنج میں پڑ جاتا ہے کہ مرزا قادیانی مرد تھایا عورت یا پھر اس کا تعلق مخنثوں سے تھا۔ آئیے ذرا اس حوالے سے مرزا قادیانی اوراس کی ذریت کی عجیب و غریب تحریروں کو ملاحظہ فرمائیں۔چنانچہ مرزا قادیانی رقم طراز ہے کہ
    ’’درحقیقت میرے اور میرے خدا کے درمیان ایسے باریک راز ہیں جن کو دنیا نہیں جانتی اور مجھے خدا سے ایک نہانی تعلق ہے جو ناقابل بیان ہے۔‘‘
    (براہین احمدیہ حصہ پنجم صفحہ 63 مندرجہ روحانی خزائن جلد 21 صفحہ 81)
    مرزا قادیانی کا مرید خاص قاضی یا رمحمد قادیانی اپنی کتاب ’’اسلامی قربانی ٹریکٹ نمبر34 پر اس تعلق کی وضاحت کرتے ہوئے رقم طراز ہے کہ
    ’’حضرت مسیح موعود علیہ السلام نے ایک موقع پر اپنی حالت یہ ظاہر فرمائی ہے کہ کشف کی حالت آپ پر اس طرح طاری ہوئی کہ گویا آپ عورت ہیں اور اﷲ تعالیٰ نے رجولیت کی طاقت کا اظہار فرمایا تھا۔سمجھنے والے کے لیے اشارہ ہی کافی ہے۔‘‘
    (اسلامی قربانی صفحہ 12از قاضی یار محمد قادیانی)
    محترم قارئین ! مرزا قادیانی ایک اورمقام پر رقم طراز ہے کہ:
    ’’اس نے براہین احمدیہ کے تیسرے حصہ میں میرانام مریم رکھا ہے، پھر جیسا کہ براہین احمدیہ سے ظاہر ہے دوبرس تک صفت مریمیت میں ،میں نے پرورش پائی اور پردہ میں نشوونما پاتا رہا۔ پھر جب اس پر دو برس گزر گئے تو جیسا کہ براہین احمدیہ کے حصہ چہارم صفحہ 496 میں درج ہے مریم کی طرح عیسیٰ کی روح مجھ میں نفخ کی گئی اور استعارہ کے رنگ میں مجھے حاملہ ٹھہرایا گیا اور آخر کئی مہینہ کے بعد جو دس مہینے سے زیادہ نہیں بذریعہ اس الہام کے جوسب سے آخر براہین احمدیہ کے حصہ چہارم ص 556میں درج ہے:
    ’’مجھے مریم سے عیسیٰ بنایا گیا ، پس اس طور سے میں ابن مریم ٹھہرا۔‘‘
    (کشتی نوح صفحہ 47 مندرجہ روحانی خزائن جلد 19صفحہ 50)
    محترم قارئین ! جب مرزا قادیانی نے اپنے آپ کو الہامی طور پر عورت کے روپ میں پیش کیا تو بعض لوگوں نے مرزا قادیانی پر یہ اعتراض کیا کہ کیا تمھیں حیض بھی آتا ہے تو ایسے ہی ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے مرزا قادیانی رقم طراز ہے کہ :
    ’’اسی طرح میری کتاب اربعین نمبر4صفحہ 19میں بابوالٰہی بخش صاحب کی نسبت یہ الہام ہے ،یعنی بابو الٰہی بخش چاہتا ہے کہ تیرا حیض دیکھے یا کسی پلیدی اور ناپاکی پر اطلاع پائے مگر خدا تعالیٰ تجھے اپنے انعامات دکھلائے گا جو متواتر ہوں گے اور تجھ میں حیض نہیں بلکہ وہ بچہ ہو گیا ہے۔ ایسا بچہ جو بمنزلہ اطفال اﷲ ہے۔‘‘
    (تتمہ حقیقت الوحی صفحہ 143، مندرجہ روحانی خزائن جلد 22صفحہ 581)
    محترم قارئین!مذیدقابلِ غوربات یہ ہے کہ مرزاقادیانی نے اپنے حمل کی مدت دس ماہ بیان کی ہے جبکہ طبی نقطہ نظرسے دیکھاجائے توپتہ چلتا ہے کہ عورت کی مدت حمل زیادہ سے زیادہ نوماہ ہوتی ہے جبکہ بھینس کی مدت حمل دس ماہ ہوتی ہے اب قادیانیوں کواپنے خودساختہ نبی کی جنس کے بارے میں بھی غور کرنا ہوگاکہ وہ مرد تھا یا کہ عورت ‘انسان تھا یاکہ حیوان؟
    مذیدملاحظہ فرمائیے کہ مرزاقادیانی الہامی حمل کے ساتھ ساتھ کس طرح دردزِہ کا تذکرہ کرتاہے چنانچہ مرزاقادیانی رقمطراز ہے کہ
    ’’خدانے مجھے پہلے مریم کاخطاب دیااورپھرنفخ روح کاالہام کیا۔پھر بعداس کے یہ الہام ہواتھا۔فاجاء ھاالمخاض الٰی جزع النخلۃ قالت یالیتنی مت قبل ھذاوکنت نسیامنسیّا۔یعنی پھرمریم کو جومراداس عاجزسے ہے دردزِہ تنہ کھجورکی طرف لے آئی۔‘‘
    (کشتی نوح صفحہ48مندرجہ روحانی خزائن جلد19صفحہ51)

اس صفحے کی تشہیر