1. ختم نبوت فورم پر مہمان کو خوش آمدید ۔ فورم میں پوسٹنگ کے طریقہ کے لیے فورم کے استعمال کا طریقہ ملاحظہ فرمائیں ۔ پھر بھی اگر آپ کو فورم کے استعمال کا طریقہ نہ آئیے تو آپ فورم منتظم اعلیٰ سے رابطہ کریں اور اگر آپ کے پاس سکائیپ کی سہولت میسر ہے تو سکائیپ کال کریں ہماری سکائیپ آئی ڈی یہ ہے urduinملاحظہ فرمائیں ۔ فیس بک پر ہمارے گروپ کو ضرور جوائن کریں قادیانی مناظرہ گروپ
  2. ختم نبوت لائبریری پراجیکٹ

    تحفظ ناموس رسالتﷺ و ختم نبوت پر دنیا کی مایہ ناز کتب پرٹائپنگ ، سکینگ ، پیسٹنگ کا کام جاری ہے۔آپ بھی اس علمی کام میں حصہ لیں

    ختم نبوت لائبریری پراجیکٹ
  3. ہمارا وٹس ایپ نمبر whatsapp no +923247448814
  4. [IMG]
  5. ختم نبوت فورم کا اولین مقصد امہ مسلم میں قادیانیت کے بارے بیداری شعور کرنا ہے ۔ اسی مقصد کے حصول کے لیے فورم پر علمی و تحقیقی پراجیکٹس پر کام جاری ہے جس میں ہمیں آپ کے علمی تعاون کی اشد ضرورت ہے ۔ آئیے آپ بھی علمی خدمت میں اپنا حصہ ڈالیں ۔ قادیانی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد قادیانی کتب پراجیکٹ مرزا غلام قادیانی کی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ تمام پراجیکٹس پر کام کرنے کی ٹرینگ یہاں سے لیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ کا طریق کار

مرزا قادیانی کا صادق و کذب جانچنے کا معیار

محمدعثمان نے 'دعوتی سیکشن' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ مئی 28, 2019

  1. ‏ مئی 28, 2019 #1
    محمدعثمان

    محمدعثمان رکن ختم نبوت فورم

    السلام وعلیکم ورحمتہ اللہ وبرکاتہ۔۔۔ قادیانی خواتین و حضرات بار بار شہ رگ کاٹنے والی آیت پیش کر یہ ثابت کرنے کی کوشش کرتے ہیں کہ اللہ نے مرزا صاحب کی شہ رگ نہیں کاٹی تھی اس لیے وہ سچےتھےاور اس کو مرزا صاحب کے سچے ہونے کا معیار بتاتے ہیں.
    حالانکہ مرزا صاحب نے خود روحانی خزائن جلد 5 آئینہ کمالات اسلام صفحہ 288 پرلکھا ہے کہ ''بد خیال لوگوں کو واضح ہو کہ ہمارا صدق اور کذب جانچنے کے لیے ہماری پیش گوئی سے بڑھ کر اور کوئی محک امتحان نہیں ہو سکتا''
    مرزا صاحب نے خود روحانی خزائن جلد 17 اربعین نمبر 4 صفحہ 461 کے حاشیے میں لکھا ہے کہ ''اگر ثابت ہو کہ میری 100 پیش گوئیوں میں سے ایک بھی جھوٹی نکلی ہو تو میں اقرار کروں گا کہ میں کاذب ہوں''
    مرزا صاحب نے خود روحانی خزائن جلد 5 آئینہ کمالات اسلام صفحہ 322 اور 323 پر لکھا ہے کہ '' جو شخص اپنے دعوی میں کاذب ہو اس کی پیش گوئی ہرگز پوری نہیں ہوتی''
    مرزا صاحب نے خود روحانی خزائن جلد 15 تریاق القلوب صفحہ 382 پر لکھا ہے کہ '' یہ بات بھی ظاہر ہے کہ انسان کا اپنی پیش گوئی میں جھوٹا نکلنا خودتمام رسوائیوں سے بڑھ کر رسوائی ہے''
    مرزا صاحب نےخود روحانی خزائن جلد 19 کشتی نوح صفحہ 5 پر لکھا ہے کہ ''اور ممکن نہیں کہ نبیوں کی پیش گوئیاں ٹل جائیں''
    مرزا صاحب نےخود روحانی خزائن جلد 12 استفتاء صفحہ 111 پر لکھا ہے کہ '' توریت اور قرآن نے بڑا ثبوت نبوت کا صرف پیش گوئی کو قرار دیا ہے''
    مرزا صاحب نے خود روحانی خزائن جلد 10 آریہ دھرم صفحہ 62 پر لکھا ہے کہ '' لیکن اگر کوئی اس کے برخلاف مدعی ہے تو ہماری کتب موصوفہ سے اپنے دعوے کو ثابت کرے۔ ورنہ بے ایمان اور خیانت پیشہ ہے''
    یہ سب مرزا صاحب نے خود اپنے سچے اور جھوٹے ہونے کا معیار مقرر کیا ہے اور قادیانی کہتے ہیں کہ صرف قرآن سے بات کرو۔ شرم کا مقام ہے اہل قادیانیت/مرزائیت کے لیے کہ جس کو نبی مانتے ہیں اس کی کتب سے بات کرتے ہوئے ڈرتے ہیں اور اس کی بات بھی نہیں مانتے۔۔۔۔۔۔ تو میں اہل قادیانیت/مرزائیت کو اس پر مکالمے کی دعوت دیتا ہوں۔ میرا مؤقف ہے کہ شہ رگ کاٹنے والی آیت کسی جھوٹی نبوت کے دعویدار کے لیے سزا نہیں ہے بلکہ وہ آیت اور اس کا سیاق وسباق خاص آخری نبی اور رسول محمدﷺ کے لیے ہے۔

اس صفحے کی تشہیر