1. ختم نبوت فورم پر مہمان کو خوش آمدید ۔ فورم میں پوسٹنگ کے طریقہ کے لیے فورم کے استعمال کا طریقہ ملاحظہ فرمائیں ۔ پھر بھی اگر آپ کو فورم کے استعمال کا طریقہ نہ آئیے تو آپ فورم منتظم اعلیٰ سے رابطہ کریں اور اگر آپ کے پاس سکائیپ کی سہولت میسر ہے تو سکائیپ کال کریں ہماری سکائیپ آئی ڈی یہ ہے urduinملاحظہ فرمائیں ۔ فیس بک پر ہمارے گروپ کو ضرور جوائن کریں قادیانی مناظرہ گروپ
  2. ختم نبوت لائبریری پراجیکٹ

    تحفظ ناموس رسالتﷺ و ختم نبوت پر دنیا کی مایہ ناز کتب پرٹائپنگ ، سکینگ ، پیسٹنگ کا کام جاری ہے۔آپ بھی اس علمی کام میں حصہ لیں

    ختم نبوت لائبریری پراجیکٹ
  3. ہمارا وٹس ایپ نمبر whatsapp no +923247448814
  4. [IMG]
  5. ختم نبوت فورم کا اولین مقصد امہ مسلم میں قادیانیت کے بارے بیداری شعور کرنا ہے ۔ اسی مقصد کے حصول کے لیے فورم پر علمی و تحقیقی پراجیکٹس پر کام جاری ہے جس میں ہمیں آپ کے علمی تعاون کی اشد ضرورت ہے ۔ آئیے آپ بھی علمی خدمت میں اپنا حصہ ڈالیں ۔ قادیانی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد قادیانی کتب پراجیکٹ مرزا غلام قادیانی کی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ تمام پراجیکٹس پر کام کرنے کی ٹرینگ یہاں سے لیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ کا طریق کار

نبی کہہ کے سور نوں پھردے نیں ٹھگدے

ضیاء رسول امینی نے 'منظوم کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ اکتوبر 10, 2017

  1. ‏ اکتوبر 10, 2017 #1
    ضیاء رسول امینی

    ضیاء رسول امینی منتظم اعلیٰ رکن عملہ ناظم پراجیکٹ ممبر رکن ختم نبوت فورم

    اک دن نکلیا سیر نوں ایہہ مرزا
    پنجے بھار رکھدا سی پیر نوں ایہہ مرزا
    ویکھیا تے آکھیا ایہنوں نور دین نے
    پیر تیرے ملکہ وکٹوریہ توں حسین نیں
    گل سن ساریاں سی ہسی نکل آئی سی
    سجے وچ کھبی یارو جتی اوہنے پائی سی
    تھوڑا جیا اگے جا مرید نے جو ویکھیا
    کہن لگا دل چ کیوں پینا ایں پُلیکھیا
    جتی دوہنواں پیراں چ سی سب نوں معلوم اے
    ہُن تے ایہہ مویا اک جتی توں محروم اے
    پتہ نہیوں لگدا جتی ڈگ پئی دا
    تے دعوی اے نبوت دا ایس نشئی دا
    سوراں ایہنوں ویکھیا تے شور پان لگ پئے
    کٹھے ہو کے سارے سردار ول چل پئے
    کہن لگے لگدا اے ایہہ اپنے قبیلے دا کردا
    کی فردا اے انساناں چ سویلے دا
    مریداں جدوں ویکھیا سور آوندے پئے نیں
    جتی ہتھ پھڑ سارے نس پئے نیں کہن
    لگے مرزیا توں کیوں نہیں نسدا
    مرزا آرام نال کھلوتا سی ہسدا
    کہن لگا میں وی ایہناں دا ای خاندان آں
    دنیا تے سور بشکل انسان آں
    مرید اوہنوں پھڑ کے گھر ول چل پئے
    لوکاں اگے اوہنوں اک نبی کہن لگ پئے
    نبی کہہ کے سور نوں پھردے نیں ٹھگدے
    ایسی لئی ایہہ بندیاں سور جئے نیں لگدے
    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ تاذہ الہام بقلم ضیاء رسول

اس صفحے کی تشہیر