1. ختم نبوت فورم پر مہمان کو خوش آمدید ۔ فورم میں پوسٹنگ کے طریقہ کے لیے فورم کے استعمال کا طریقہ ملاحظہ فرمائیں ۔ پھر بھی اگر آپ کو فورم کے استعمال کا طریقہ نہ آئیے تو آپ فورم منتظم اعلیٰ سے رابطہ کریں اور اگر آپ کے پاس سکائیپ کی سہولت میسر ہے تو سکائیپ کال کریں ہماری سکائیپ آئی ڈی یہ ہے urduinملاحظہ فرمائیں ۔ فیس بک پر ہمارے گروپ کو ضرور جوائن کریں قادیانی مناظرہ گروپ
  2. ختم نبوت لائبریری پراجیکٹ

    تحفظ ناموس رسالتﷺ و ختم نبوت پر دنیا کی مایہ ناز کتب پرٹائپنگ ، سکینگ ، پیسٹنگ کا کام جاری ہے۔آپ بھی اس علمی کام میں حصہ لیں

    ختم نبوت لائبریری پراجیکٹ
  3. ہمارا وٹس ایپ نمبر whatsapp no +923247448814
  4. [IMG]
  5. ختم نبوت فورم کا اولین مقصد امہ مسلم میں قادیانیت کے بارے بیداری شعور کرنا ہے ۔ اسی مقصد کے حصول کے لیے فورم پر علمی و تحقیقی پراجیکٹس پر کام جاری ہے جس میں ہمیں آپ کے علمی تعاون کی اشد ضرورت ہے ۔ آئیے آپ بھی علمی خدمت میں اپنا حصہ ڈالیں ۔ قادیانی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد قادیانی کتب پراجیکٹ مرزا غلام قادیانی کی کتب کے رد کے لیے یہاں جائیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ تمام پراجیکٹس پر کام کرنے کی ٹرینگ یہاں سے لیں رد روحانی خزائن پراجیکٹ کا طریق کار

ہا ئے لڑکی

در صدف ایمان نے 'متفرق مقالات وتحاریر' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ جولائی 30, 2016

  1. ‏ جولائی 30, 2016 #1
    در صدف ایمان

    در صدف ایمان رکن ختم نبوت فورم

    ✍تحریر :در صدف ایمان

    وہ خاموش تھی ،بے حد خاموش ،اس کے اپنے ،ما ں باپ، بہن بھائ،اس کے پاس تھے ، ا ر د گر د تھے اس کے غم کی تفصیل جاننا چاہ رہے تھے ،اس کی خاموشی کی وجہ معلوم کرنا چاہ رہے تھے ...لکن وہ پھر بھی مہر بہ لب تھی ، ساکت بہ چشم تھی ...اس کے اپنے اسے اس حال میں دیکھ کر پریشان ہورہے تھے ...اور وہ ان سب کی پریشانی سے دور صرف اپنے غم میں دبی ہوئ تھی ڈوبی ہوئی تھی .....
    اس کے خون کے رشتے اس کی خاموشی کی وجہ پوچھ رہے تھے ....پو چھ رہے تھے اس کے غم کی وجہ .....لکن ایسا گمان ہوتا تھا کے لفظوں نےاس کے لبوں سے نکلنے سے انکار کردیا ہو ...اور وہ بتاتی بھی تو کیا بتاتی......
    : یہ کے اس نے بھی دھوکہ کھا لیا ...جس بیٹی پر بہت اعتبار کیا تھا اس نے چھپ کے اس اعتبار کو کرچی کرچی کرڈالا .....جس ذات پر اتنا غرور تھا ...اس ذات کے غرور کو مٹی مٹی کرڈالا ....بیان بھی کرتی تو کیا ؟؟؟؟یہ کے مسلمان ہوتے ہوے اس نے اپنے وجود کو جلا ڈالا اور راکھ جھوٹے خوابو ں میں بہا ڈا لی ....کہتی بھی تو کیا ایک ....مرد کی محبّت کی اسیر ہو گئی تھی ...جس نے اسے پلکو ں پر اٹھایا نظروں سے گرانے کے لئے ....جس نے عزت کے پہناے تھے ،ذلّت کی قبر میں دفنانے کے لئے .....
    جس نے لفظو ں سے مان کا زیور پہنایا ....
    فخر کا محل ڈ ھا نے کے لئے .....
    ..اور آج جب اس کے پاس صرف اور صرف خالی دامن رہ گیا تو اس کی محبّت ختم ھوگئ.......اور اس کہانی کا بھی انتھ ہوگیا .....ایک مرد کی فطرت پر ...ایک عورت کی بیوقوفی پر ......

    ازلی کہانی ان مردوں کی جنہیں ایک وقت میں 10 سے 20 محبّتیں آرام سے ہوجاتی ہیں...بات بھی کرسکتے ہیں ...اور محبّت بھی ...لکن صرف لفظوں کی حد تک .....لکن پتا نہیں کیوں اس جھوٹ کے تاروں سے بنیں جھوٹے جال میں پھنستے ان سمجھدار لڑکیوں کی سمجھ داری کہاں چلی جاتی ہے .....کہنا تو صرف یہ ہے کہ .....
    اسے تو اب خاموش ہی رہنا تھا ....صرف خاموش ......نہ جانے کب تک .......
    اور شا ید اسےہی نہیں روز کسی نہ کسی کو ...........
    • Like Like x 1

اس صفحے کی تشہیر